سنچورین، 19 مارچ (یو این آئی) بنگلہ دیش کو اب ہر ملک میں جاکر ون ڈے میں فتح حاصل ہوگئی ہے۔ بنگلہ دیش نے جمعہ کی رات ایک اور تاریخ رقم کی، اس ٹیم کی جنوبی افریقہ کے خلاف جنوبی افریقہ میں پہلی ون ڈے جیت ہے بنگلہ دیش کو جنوبی افریقہ کی سرزمین پر ون ڈے میں فتح کا مزہ چکھنے میں 20 سال لگ گئے۔

سنچورین میں کھیلے گئے اس میچ میں بنگلہ دیش نے 314/7 کا اسکور بنایا اور پھر میزبان ٹیم کو 38 رنز پہلے روک دیا۔ڈیوڈ ملر نے بنگلہ دیش کو فتح سے محروم رکھنے کی پوری کوشش کی لیکن 46 ویں اوور میں آؤٹ ہوتے ہی یہ فتح مہمانوں کے لیے ایک رسم بن چکی تھی۔ ملر نے 57 گیندوں پر 79 رنز بنائے، تقریباً ہر اوور میں باؤنڈری لگائی۔ ملر کے علاوہ ریسی وین ڈیر ڈوسن نے بھی نصف سنچری کھیلی اور 86 رنز بنا کر وہ جنوبی افریقہ کے ٹاپ اسکورر رہے لیکن ٹیم کو فتح سے ہمکنار نہ کر سکے۔جنوبی افریقہ کی ٹیم 48.5 اوورز میں 276 رنز پر ڈھیر ہو گئی۔

اس سے قبل بنگلہ دیش کی اننگز کی خاص بات لیجنڈ آل راؤنڈر شکیب الحسن تھے جنہوں نے 77 رنز کی عمدہ اننگز کھیلی اور جنوبی افریقہ کی سرزمین پر ون ڈے کرکٹ میں بنگلہ دیش کے سب سے زیادہ اسکور میں اہم کردار ادا کیا۔ شکیب اور نوجوان بلے باز یاسر علی نے چوتھی وکٹ کے لیے 115 رنز کی شراکت قائم کی۔ یہ یاسر کی پہلی ون ڈے نصف سنچری تھی، بنگلہ دیش کی اننگز کے دوران مجموعی طور پر 11 چھکے لگے۔ یہ غیر ملکی سرزمین پر بنگلہ دیش کی طرف سے ایک ون ڈے اننگز میں سب سے زیادہ چھکوں کا مشترکہ ریکارڈ بھی ہے۔