بریکینگ نیوز: مہاراشٹرمیں دوبارہ کورونا پابندیاں نافذ، جانئے کیا ہے نئی پابندیاں

11

ممبئی: 27،نومبر۔ (ورق تازہ نیوز) ریاستی حکومت گزشتہ چند دنوں میں کووڈ مریضوں کی بڑھتی ہوئی تعداد کے پیش نظر ایک بار پھر چوکس ہوگئی ہے۔ جنوبی افریقہ میں پائے جانے والے کورونا کی ایک نئی قسم کے بارے میں تشویش کا اظہار کیا گیا ہے۔ مرکزی حکومت نے ملک کی تمام ریاستی حکومتوں کو ایک خط لکھ کر چوکس رہنے کی ہدایت دی ہے۔ مرکز نے بتایا ہے کہ بیرون ملک سے آنے والے مسافروں کے معاملے میں خاص خیال رکھا جانا چاہیے۔ ریاست مہاراشٹر میں کورونا ریاست میں کورونا کی صورتحال کا جائزہ لینے اور شہریوں کے لیے نئے ضوابط کا اعلان کیاگیاہے۔

جس کے مطابق مکمل ویکسین شدہ افراد کو پبلک ٹرانسپورٹ میں سفر کرنے کی اجازت ہے۔ اس کے علاوہ مالز، سبھاگرہ اور تقریبات میں ویکسین کی دو خوراک لینے والوں کو داخلے کی اجازت رہے گی۔ ریاستی حکومت کی طرف سے یونیورسل پاس جاری کیے گئے ہیں۔ سفر کے دوران ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ اور تصویری شناختی کارڈ کا ہونا لازمی قرار دیا گیا ہے۔

قوانین کیا ہیں؟ صرف وہی لوگ جو ویکسین کی دو خوراکیں لے چکے ہیں وہ رکشہ، ٹیکسی، بسوں، کیب میں سفر کر سکتے ہیں۔ یعنی اب پبلک یا پرائیویٹ گاڑی تک صرف مکمل ویکسین شدہ افراد کو ہی رسائی کی اجازت ہوگی۔ ویکسینیشن کے بغیر سفر ممکن نہیں ہوگا۔ مہاراشٹر میں آنے والے مسافروں کو روانگی سے 72 گھنٹے قبل مکمل ویکسینیشن سرٹیفکیٹ یا RT PCR ٹیسٹ رپورٹ فراہم کرنے کی ضرورت ہے۔سنیما ہال، شادی ہال، آڈیٹوریم میں صر ف گنجائش کے 50فیصد افراد ہی شرکت کر سکتے ہے۔

ماسک نہ پہننے پر 500 روپے جرمانہ، دکان میں گاہک کے پاس ماسک نہ پہننے رہنے پر دکاندار کو 10 ہزار جرمانہ، مال میں ماسک نہ پہننے پر مالک کو 50 ہزار وپے جرمانہ ہوگا ۔سیاسی میٹنگوں اور پروگراموں میں کووڈ قواعد کی خلاف ورزی پر 50 ہزار جرمانہ عائد کیاجائے گا۔
ٹیکسی یا نجی گاڑی میں ماسک نہ پہننے پر 500 روپے جرمانہ اور گاڑی کے مالک پر 500 روپے جرمانہ عائد کیا جائے گا۔ سماجی فاصلہ کم از کم 6 فٹ کا فاصلہ رکھیں۔ عوامی مقامات پر تھوکنے پر سخت پابندی۔