بریکینگ نیوز:یکم ڈسمبر سے اسکول شروع ہوں گے‘محکمہ تعلیما ت کی گائیڈ لائنس جاری

3

ممبئی::29 نومبر۔(ورق تازہ نیوز)کورونا کے نئے ویرینئٹ کے پیش نظر ریاست میں کچھ پابندیاں عائد کی گئی ہیں اس لئے ریاست میں یکم ڈسمبرسے پرائمری اسکولوں کے آغاز پرسوالیہ نشان اٹھایاجارہاتھا۔ لیکن آج مہاراشٹر حکومت کے محکمہ تعلیمات نے شام میں ایک احکام جاری کرتے ہوئے واضح کردیا کہ مہاراشٹرمیں یکم ڈسمبر 2021ءسے اول جماعت سے اسکول شروع کئے جارہے ہیں۔

ا س ضمن میں محکمہ تعلیمات نے کچھ گائیڈ لائنس جاری کی ہیں ۔ شہری علاقوں میں اول جماعت ساتویں جماعت تک کلاسیس شروع کی جارہی ہیں جبکہ دیہی علاقوں میں اول جماعت تاچہارم جماعت تک اسکول کی کلاسیس شروع کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔

محکمہ تعلیمات کے رہنما خطوط:
اسکول حکام سے کہا گیا ہے کہ وہ اس بات کو یقینی بنائیں کہ طلبہ کے درمیان ہر وقت کم از کم 6 فٹ کا فاصلہ ہو اور طلبہ اور اساتذہ سماجی دوری کی مشق کریں۔
تمام طلباءاور عملے کے ارکان سے کہا گیا ہے کہ وہ ہر وقت ماسک پہنیں۔
اگر طلبائ یا اساتذہ میں کوئی علامات پائی جاتی ہیں تو انہیں کیمپس میں داخل ہونے سے روک دیا جائے گا۔
ریاستی محکمہ صحت نے یہ بھی کہا ہے کہ غیر تدریسی عملے کے ارکان کی ویکسینیشن لازمی ہے اور اس لیے اسکولوں کو اس بات کو یقینی بنانا چاہیے کہ اسے مکمل کیا جائے۔
اسکولوں اور گردونواح کو صاف ستھرا رکھنا ہے اور صفائی ستھرائی کو بھی لازمی قرار دیا گیا ہے۔ طلباءکو بھی بار بار ہاتھ دھونے کا مشورہ دیا گیا ہے۔
اسکول کے حکام سے کہا گیا ہے کہ وہ وبائی صورتحال کو دیکھتے ہوئے بائیو میٹرک حاضری کا نظام یا کوئی دوسرا متبادل اختیار کریں۔
اسکولوں سے یہ بھی کہا گیا ہے کہ وہ ایسی سرگرمیوں سے گریز کریں جن سے ہجوم ہو سکتا ہے جس میں گیمز یا گروپ سرگرمیاں شامل ہیں۔
جاری کردہ سرکاری احکامات کے مطابق، ایک چوتھائی طلباءکو آن لائن تعلیم تک رسائی حاصل ہونی چاہیے۔ بچوں سے بھی کہا گیا ہے کہ وہ بغیر کسی ناکامی کے تمام اصولوں پر عمل کریں۔
اسکول کے حکام کو یہ بھی متنبہ کیا گیا ہے کہ اگر ایک ہی کلاس یا ایک ہی اسکول کے 5 سے زیادہ بچے دو ہفتوں کے اندر کوویڈ سے متاثر پائے جاتے ہیں تو حکومت اسکول کے کوویڈ سے بچاو¿ کے ایکشن پلان کا جائزہ لے گی اور اس کے مطابق کارروائی کرے گی۔