چین کی فضائی کمپنی چائنا ایسٹرن ایئرلائنز کا ایک مسافر طیارہ صوبہ گوانگشی میں گر کر تباہ ہو گیا ہے۔چین کے سول ایوی ایشن کے ادارے (سی اے اے) کا کہنا ہے کہ اس بوئنگ 737-800 طیارے پر 123 مسافر اور عملے کے نو افراد سوار تھے۔

خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق چینی صدر شی جن پنگ نے واقعے پر ‘حیرانی’ ظاہر کرتے ہوئے فوری تحقیقات کا حکم دیا ہے۔ چین کے سرکاری میڈیا سی سی ٹی وی کے مطابق صدر شی نے امدادی کارروائیوں کے علاوہ جلد از جلد حادثے کی وجہ معلوم کرنے کی ہدایت دی ہے۔

تاحال اس حادثے کی وجہ اور اس میں ہونے والی جانی نقصان کے حوالے سے کوئی معلومات سامنے نہیں آئی ہیں تاہم حادثے کے بعد گوانگشی میں پہاڑوں پر آگ لگنے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔چائنا ایسٹرن ایئرلائنز کی جانب سے تاحال سے حادثے کے بارے میں کوئی بیان جاری نہیں کیا گیا ہے۔

ایم یو 5735 نامی اس پرواز نے کونمینگ سے مقامی وقت ایک بج کر 11 منٹ پر اڑان بھری تھی اور اس نے تین بج کر پانچ منٹ پر گوانگزو پہنچنا تھا۔چینی سی اے اے کے مطابق امدادی کارروائیاں شروع کر دی گئی ہیں اور ریسکیو کے عملے کو متاثرہ علاقے میں بھیجا جا رہا ہے۔سوشل میڈیا پر شیئر کی گئیں ویڈیوز میں حادثے کے مقام پر طیارے کا ملبہ اور دھواں اٹھتا دیکھا جاسکتا ہے۔ چین کے سرکاری میڈیا نے بھی بعض ویڈیوز اور تصاویر شیئر کی ہیں۔