ناندیڑ:9ڈسمبر۔(ورق تازہ نیوز)ہندوتوا وادی تنظیموں نے پھر ایکبار پولس انتظامیہ پردباوبنانے کے لئے شہرمیں کل 10ڈسمبر کوقدیم مونڈھا میں دھرنا آندولن کافیصلہ کیاتھا۔یہ دھرنا شہر میں پیش آئے واقعات کوسامنے رکھتے ہوئے رکھنے کاطئے کیاگیاتھا۔

سوشل میڈیا پرآج دن بھراسی دھرنے کے تعلق سے پوسٹ وائرل ہوتی رہیں۔ مگر ضلع انتظامیہ نے اس دھرنے کے ضمن میں ہندوتواوادی تنظیموں سے بات چیت کی جس کے بعدیہ دھرنا منسوخ کرنے کافیصلہ کیاگیاہے۔

سنتوش اوجھا ‘گنیش ٹھاکور ‘ نکھیل دیشمکھ کی دستخط سے ایک میمورنڈم جاری کیاگیا ہے جو ناندیڑضلع ایس پی کے نام سے ہے ۔ جس میں کہاگیاہےکہ ناندیڑ کے ایس پی اور دیگر پولس افسران کے ساتھ میٹنگ ہوئی جس میں تیقن دیا گیا کہ 7ڈسمبر کوگاڑی پورہ میں رونما ہوئے واقعہ میں کسی بھی بے قصور فرد کو گرفتارنہیں کیاجائے گااور تحقیقات صحیح سمت میں ہوگی ۔ اسلئے 10 ڈسمبر کو دھرنا آندولن جو قدیم مونڈھا میں منعقد کیاگیاتھااب منسوخ کردیاگیا ہے ۔ اس دن صرف پانچ افراد پر مبنی وفد ضلع ایس پی کو میمورنڈم دے گا۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔