اورنگ آباد:(ف۔الف)ملک میں خصوصاً مہاراشٹر میں بڑھتے ہوئے کرونا مریضوں کی تعداد کے پیش نظر کرفیو لگانے کا فیصلہ مہاراشٹر حکومت نے آخرکرہی دیا ہے۔ یہ کرفیو رات کے 11بجے سے صبح کے 6 بجے تک رہے گااس دوران شہریان کو گھر سے باہر نکلنے کی اجازت نہیں ہوگی۔

تفصیلات کے مطابق شہر اورنگ آباد کے کمشنر،کلکٹر اور میونسپل کمشنر کیا ایک مشترکہ میٹنگ منعقد ہوئی جس میں یہ حکم نامہ جاری کیاگیا کہ شہر میں آج سے 14 مارچ تک رات کا کرفیو نافذ کردیا جائے جو رات 11 بجے سے صبح6 بجے تک نافذ رہے گا۔ اس دوران دن بھر شہریان اپنی ضروریات زندگی کی تمام چیزیں خرید سکتے ہیں۔ساتھ ہی میٹنگ میں یہ طئے پایا کہ مذہبی عبادتگاہوں،سماجی،تفریحی ، ثقافتی اور شادی خانوں میں صرف ۵۰ افراد کو ہی موجود رہنے کی اجازت دی گئی ہے۔

خلاف ورزی کرنے والوں کو جرمانہ ادا کرنا پڑے گا۔ واضح رہے کہ شہر میں اب تک چار لاکھ کرونا ٹیسٹ ہوچکے ہیں ۔اور میونسپل کارپوریشن کے پاس ۵۰ ہزار اینٹی جین اور آر ٹی پی آر کٹس موجود ہیں وہیں شہر میں ۱۵ مراکز پر شہریان کے کرونا ٹیسٹ کے مراکز قائم کئے گئے ہیں۔

جہاں جانچ کے بعد ۲۴ گھنٹوںتک کے لئے مریض نگرانی میں رکھا جائے گا۔ انتظامیہ نے شہریان سے اپیل کی ہے کہ وہ کرونا پر قابو پانے کے لئے ہمارا ساتھ دیں۔ ساتھ ہی سماجی دوری کا فاصلہ بنائے رکھے۔سیناٹائزرکا استعمال کریں اور ماسک لگانا ضروری سمجھے۔اگر کوئی ان احتیاطی تدابیر اور رہنماء ہدایات کی خلاف ورزی کرتا ہواپایا جائے گااس کے خلاف کاروائی کی جائے گی اور جرمانہ بھی وصول کیا جائے گا۔آج سے رات 11 بجے سے صبح 6 بجے تک اورنگ آباد میں کرفیو حکم 14 مارچ تک نافذ ہوگا۔