مہاراشٹر کے سابق وزیر اعلی دیویندر فڑنویس کو بدھ کو ممبئی پولیس نے حراست میں لے لیا۔ حراست میں لیے جانے کے دوران انھیں پولیس کی جیپ سے بی جے پی کا جھنڈا لہراتے ہوئے دیکھا گیا تھا۔

نواب ملک کے استعفیٰ کا مطالبہ کرتے ہوئے احتجاجی مارچ کرنے پر فڑنویس کے ساتھ ممبئی پولیس نے دیگر رہنماؤں کو بھی حراست میں لے لیا تھا۔ ان میں پروین دریکر، آشیش شیلر، گریش مہاجن، نتیش رانے، منگل پربھات لودھا، اور نرنجن داوکرے شامل ہیں۔

وزیر نواب ملک کے استعفیٰ کے لیے ممبئی میں مارچ کر رہے بی جے پی لیڈروں نے آج ٹھاکرے حکومت پر تنقید کی۔ بی جے پی نے آج ممبئی میں ہزاروں کارکنوں کی موجودگی میں آزاد میدان سے میٹرو سنیما تک مظاہرہ کیا۔

مارچ شروع ہونے سے پہلے بی جے پی لیڈروں نے آزاد میدان میں ٹھاکرے حکومت اور اتحادی لیڈروں پر حملہ کیا۔

اپوزیشن لیڈر دیویندر فڑنویس نے خبردار کیا کہ نواب ملک کے استعفیٰ کے بغیر امن قائم نہیں ہوگا۔ میٹرو سنیما کے قریب احتجاج کے بعد پولیس دیویندر فڑنویس اور دیگر بی جے پی لیڈروں کو گرفتار کر کے یلو گیٹ تھانے لے گئی۔ اس دوران پولیس نے فڑنویس کو رہا کر دیا ہے اور دیگر لیڈروں کو بھی رہا کیا جا رہا ہے۔