بحیرہ احمر میں تیرتے ٹینکر سے تیل کا اخراج روکنے سعودی ایک کروڑ ڈالر دے گا

ریاض : سعودی عرب نے اپنی آبی سرحدوں سے ملحقہ بحیرہ احمر میں ایک پرانے یمنی آئل ٹینکر میں بھرے تیل کو پانی میں گرنے سے روکنے کے کام میں مدد دینے کیلیے ایک کروڑ ڈالر دینے کا وعدہ کیا ہے۔یہ 45 برس پرانا آئل ٹینکر ہے جسکا نام ’ایف ایس او سیفر‘ ہے۔ اس ٹینکر کو تیل ذخیرہ کرنے کے لیے ایک تیرتے ہوئے اسٹوریج پلیٹ فارم کے طور پر عرصے تک استعمال کیا جاتا رہا۔اور اب یہ باغیوں کے قبضے والی بندرگاہ حدیدہ کے ساحل کے قریب بیکار کھڑا ہوا ہے۔ یمن کی خانہ جنگی شروع ہونے کے بعد سے اسے استعمال نہیں کیا گیا ہے۔سعودی قیادت والے فوجی اتحاد نے دو ہزار پندرہ میں یمن کی خانہ جنگی میں مداخلت کی۔