• 425
    Shares

سپر ہٹ فلم دنگل سے شہرت کی بلندیوں پر پہنچنے والی چائلڈ اسٹار زائرہ وسیم نے 2019 میں مذہبی بنیادوں پر فلم انڈسٹری کو خیر باد کہہ دیا تھا۔

اب تقریباً دو برس بعد زائرہ وسیم نے اپنے انسٹاگرام پر ایک تصویر پوسٹ کی ہے جس میں وہ دریا کے اوپر بنے ایک پل پر کھڑی ہیں تاہم ان کا چہرہ اس تصویر میں نظر نہیں آرہا۔

زائرہ نے تصویر کے کیپشن میں لکھا ’Warm October Sun‘۔ اس پوسٹ پر اب تک ایک لاکھ سے زائد لائکس آچکے ہیں۔

زائرہ نے فلم انڈسٹری کیوں چھوڑی؟
سری نگر سے تعلق رکھنے والی بالی وڈ اداکارہ زائرہ وسیم نے 30 جون 2019 کو بالی وڈ چھوڑنے کا اعلان سوشل میڈیا پر جاری طویل بیان کے ذریعے کیا۔

سوشل میڈیا پر اپنی طویل پوسٹ میں انہوں نے لکھا کہ فلمی کیریئر میں عزت اور شہرت ملی ہے لیکن اس کی وجہ سے مذہب سے دور ہورہی تھی۔انہوں نے پیغام میں کہا کہ فلمی دنیا کی وجہ سے ان کی زندگی سے برکت ختم ہورہی تھی جس کے باعث وہ بالی وڈ سے دوری اختیار کررہی ہیں۔

یاد رہے کہ زائرہ وسیم نے اپنا فلمی کیریئر 2016 میں فلم ’دنگل‘ سے شروع کیا جس میں انہوں نے عامر خان کی بیٹی کا کردار کیا تھا اور ان کی جاندار اداکاری کو مداحوں نے بے حد پسند کیا تھا۔

اس کے بعد اداکارہ نے ایک اور سپر ہٹ فلم ’سیکرٹ اسٹار‘ میں بھی مرکزی کردار ادا کیا۔ زائرہ وسیم کو ’دنگل‘ میں اداکاری پر بہترین معاون اداکارہ کا نیشنل ایوارڈ بھی دیا گیا، اس کے علاوہ انہیں کئی فلمی ایوارڈز بھی ملے ہیں۔

دنگل گرل کے بالی وڈ چھوڑنے کے اعلان کے بعد بھی ان کی ایک اور فلم ’دی اسکائی از پنک‘ اکتوبر 2019 میں نمائش کیلئے پیش کی گئی جس میں پریانکا چوپڑا اور فرحان اختر نے ان کے والدین کا کردار ادا کیا۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔