واشنگٹن: امریکی کمپنی ایپل نے اپنا اب تک کا سب سے سستا آئی فون متعارف کرا دیا ہے۔ یہ آئی فون 5-جی ٹیکنالوجی کو سپورٹ کرتا ہے اور اس نے اینڈروئیڈ فون بنانے والی کمپنیوں کے لیے سخت مقابلہ کی فضا قائم کر دی ہے۔

امریکی ریاست کیلی فورنیا کے ایپل پارک کیمپس میں اسٹیو جابز تھیٹر میں منعقد ہونے والی تقریب میں ’آئی فون ایس ای تھری‘ (iPhone SE 3) کے نام سے پیش کیے گئے اس نئے آئی فون میں پلاسٹک کی جگہ ری سائیکل میٹریل استعمال کیا ہے۔ دنیا بھر میں موجود ایپل کے صارفین کو اس ایونٹ کا بے تابی سے انتظار تھا۔

اس تھرڈ جنریشن آئی فون ایس ای ماڈل کا ڈیزائن آئی فون 8 جیسا ہے جبکہ اس میں A-15 بایونک فائیو جی چپ سیٹ دیا گیا ہے۔ بالکل یہی چپ سیٹ ایپل نے آئی فون 13 اور آئی فون 13 پرو میں بھی استعمال کیا ہے۔

یہ چپ سیٹ آئی فون 13 سیریز میں کم بیٹری استعمال کرتے ہوئے گیمنگ میں بہترین کارگردگی کا مظاہرہ کر چکا ہے۔ فون میں فرنٹ اور عقبی حصے پر مضبوط گلاس کے ساتھ 4.7 انچ اسکرین دی گئی ہے۔ آئی فون ایس ای کو ٹچ آئی ڈی کے ساتھ ہوم بٹن، بہترین بیٹری لائف کے ساتھ فائیو جی ٹیکنالوجی سے لیس کیا گیا ہے۔

12 میگا پکسلز کیمرے کے ساتھ تمام ترجزئیات کے ساتھ عکس بندی کے لیے اسمارٹ ایچ ڈی اور ڈیپ فیوژن آپٹیمائزیشن بھی دی گئی ہے۔ مڈنائٹ بلیو، اسٹار لائٹ وائٹ اور پراڈکٹ ریڈ رنگ اسے خوبصورتی کے ساتھ ساتھ بہترین کارکردگی بھی عطا کرتے ہیں۔ 4 کور جی پی یو کے ساتھ یہ آئی فون 8 سے دو گنا زیادہ تیز ہے۔ اس کے علاوہ اس آئی فون میں 4 جی بی ریم کے ساتھ 64 جی بی اسٹوریج دی گئی ہے۔

ایپل نے اس 5-جی آئی فون کی قیمت 429 ڈالر رکھی گئی ہے، جوکہ موجود ایس ای ماڈل سے صرف 30 ڈالر زائد ہے۔ تاہم ہندوستان میں اس کی قیمت تھوڑی زیادہ 43900 رکھی گئی ہے۔ یہ قیمت آئی فون ایس ای 2020 سے زیادہ ہے۔ آئی فون ایس ای 2020 کی قیمت 42500 روپے تھی۔