اہم خبر : شیوسینا اور ونچت بہوجن اگھاڑی کا اتحاد

280

ممبئی : (ورق تازہ نیوز) مہاراشٹر کے سابق وزیر اعلیٰ ادھو ٹھاکرے نے آج پرکاش امبیڈکر کی ونچیت بہوجن اگھاڈی (VBA) کے ساتھ اتحاد کا اعلان کیا واضح رہے کہ وہ آنے والے ممبئی بلدی انتخابات کی تیاری کر رہے ہیں، جو گزشتہ سال ان کی شیو سینا کی تقسیم کے بعد پہلا بڑا انتخاب ہے، جب ان کی حکومت باغیوں کی جانب سے گرائی گئی تھی۔ ادھو ٹھاکرے بھارت کے آئین کا مسودہ تیار کرنے والے بھیم راؤ امبیڈکر کے پوتے پرکاش امبیڈکر کے ساتھ دو ماہ سے زیادہ بات چیت کر رہے تھے۔

مسٹر ٹھاکرے نے نامہ نگاروں کو بتایا، "آج 23 جنوری، بالاصاحب ٹھاکرے کا یوم پیدائش ہے۔ میں مطمئن اور خوش ہوں کہ مہاراشٹر کے کئی لوگ چاہتے تھے کہ ہم اکٹھے ہوں۔ پرکاش امبیڈکر اور میں آج یہاں اتحاد بنانے کے لیے ساتھ آئے ہوئے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا، "میرے دادا اور پرکاش امبیڈکر کے دادا ساتھی تھے اور انہوں نے اس وقت سماجی مسائل کے خلاف جدوجہد کی تھی۔ ٹھاکرے اور امبیڈکر کی ایک تاریخ ہے۔ اب ان کی آنے والی نسلیں ملک کے موجودہ مسائل پر لڑنے کے لیے یہاں موجود ہیں۔”

یہ اتحاد برہان ممبئی میونسپل کارپوریشن (بی ایم سی) کے انتخابات میں حکمراں ایکناتھ شندے کی قیادت والی سینا اور بی جے پی کے اتحاد سے مقابلہ کرے گا۔ مسٹر ٹھاکرے اور مسٹر امبیڈکر نے گزشتہ نومبر میں پربودھنکر ڈاٹ کام کے آغاز کے لیے ایک اسٹیج شیئر کیا تھا، یہ ویب سائٹ شیوسینا کے بانی بال ٹھاکرے کے والد پربودھنکر ٹھاکرے کے لیے وقف ہے۔

مسٹر امبیڈکر نے کہا کہ یہ اتحاد ملک میں "نئی سیاست کا آغاز” ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم سماجی مسائل پر احتجاج کا اہتمام کرتے رہے ہیں۔ سماجی مسائل پر جیتنا یا نہ جیتنا ووٹرز کے ہاتھ میں ہے لیکن ایسے لوگوں کو الیکشن لڑنے کے لیے سیٹ دینا سیاسی جماعتوں کے ہاتھ میں ہے۔

ادھو ٹھاکرے کے حلیف، کانگریس اور شرد پوار کی نیشنلسٹ کانگریس پارٹی (این سی پی) شاید اس اتحاد میں شامل نہ ہوں۔ شرد پوار نے کہا کہ وہ ’’اتحاد کے معاملے‘‘ میں نہیں پڑنا چاہتے۔

مسٹر امبیڈکر نے کہا کہ کانگریس نے "ابھی تک اتحاد کو قبول نہیں کیا ہے”۔ "ابھی تک، یہ صرف ہم دونوں پر ہی مشتمل ہیں۔ کانگریس نے ابھی تک اتحاد کو قبول نہیں کیا ہے۔ مجھے امید ہے کہ شرد پوار بھی اس اتحاد میں شامل ہوں گے،”