امراوتی قتل معاملہ کاتعلق نوپور شرما کیس سے نہیں : کمشنر کی وضاحت

61

امراوتی:2، جولائی۔(ایجنسیز) قومی تحقیقاتی ایجنسی (این آئی اے) کی چار سے پانچ رکنی ٹیم 21 جون کو ویٹرنری میڈیکل پروفیشنل امیش کولہے کے قتل میں ‘حقائق جاننے کے لیے امراوتی پہنچی ہے۔ امراوتی کوتوالی پولس اسٹیشن میں کیس درج کیا گیا ہے اور این آئی اے کی ٹیم تحقیقات کر رہی ہے۔ پولیس نے اس معاملے میں چھ ملزمان کو گرفتار کیا ہے:ان میں مدثر احمد عرف سونو رضا ولد شیخ ابراہیم (22)، عبدالتوفیق عرف نانو شیخ تسلیم (24)، شاہ رخ پٹھان عرف بادشاہ ہدایت خان (25)، شعیب خان عرف بھوریہ ولد صابر خان (22سال) عاطب راشد ولید عادل رشید (22) اور یوسف خان بہادر خان (44) شامل ہیں۔

ملزمان کو 4 جولائی تک ریمانڈ پر پولیس کی تحویل میں دے دیا گیا ہے۔ وزیر داخلہ امت شاہ نے خود ٹویٹ کیا کہ انہوں نے اس واقعہ کا نوٹس لیا ہے۔ گرفتار چھ ملزمان امراوتی کے رہنے والے ہیں۔ ‘اودے پور کیوں؟ ادے پور جیسے واقعے کے بعد مہاراشٹر کے امراوتی میں ایک فارماسسٹ کا بے دردی سے قتل کر دیا گیا، اس طرح کا ٹویٹ ایم ایل اے نتیش رانے نے کیا۔ امیش کولہے کو 21 جون کی رات میں چاقو کے وار کر کے قتل کر دیا گیا تھا۔

بی جے پی کے ریاستی ترجمان شیو رائی کلکرنی نے اس بات کی تحقیقات کا مطالبہ کیا تھا کہ آیا اس قتل کا تعلق نوپور شرما تنازعہ سے تھا۔ سٹی پولیس نے بھی اس سلسلے میں تفتیش شروع کر دی۔

تاہم امراوتی کمشنر آف پولیس ڈاکٹر آرتی سنگھ نے کہا کہ کولہے کے قتل کا تعلق نوپور شرما کیس سے نہیں ہے۔ اس کے بعد سے مہاراشٹر حکومت نے تحقیقات نیشنل انویسٹی گیشن ایجنسی کو سونپ دی ہے۔