ابوظہبی: متحدہ عرب امارات کے سینٹرل بینک نے انسداد منی لانڈرنگ پالیسی کی پابندی نہ کرنے پر گیارہ بینکوں پر پابندیاں لگا دی ہیں۔الامارات الیوم کے مطابق ان بینکوں کو منی لانڈرنگ، دہشت گردی کے لیے فنڈنگ اور غیرقانونی تنظیموں کی اعانت کے انسداد کے قانون کی خلاف ورزی پر چار کروڑ 57 لاکھ 50 ہزار درہم کے جرمانے کیے گئے۔ جرمانوں میں اس بات کو مدنظر رکھا گیا ہے کہ متعلقہ بینک 2019 کے آخر میں منی لانڈرنگ سے نمٹنے کی بابت مقرر معیار کو پورا کرنے میں ناکام ہوئے ہیں۔اماراتی سینٹرل بینک نے ملک میں موجود تمام بینکوں کو خامیاں دور کرنے کے لیے مہلت دی تھی2019 کے وسط میں بینکوں سے کہا گیا تھا کہ وہ سال کے آخر تک قواعد و ضوابط کی پابندی میں موجود خامیوں کو دور کرلیں۔ اماراتی سینٹرل بینک کا کہنا ہے کہ ’وہ تمام مالیاتی اداروں کو منی لانڈرنگ اور دہشت گردی کی فنڈنگ کے انسداد سے متعلق اعلیٰ ترین معیاری ضوابط کا پابند بنانے اور ان پر مزید انتظامی اور مالیاتی پابندی عائد کرنے کا سلسلہ جاری رکھے گا۔‘


اپنی رائے یہاں لکھیں