• 425
    Shares

متحدہ عرب امارات نے ریٹائرڈ غیر ملکیوں کے لیے اقامہ جاری کرانے کی چھ شرائط کا اعلان کیا ہےـ ریٹائرڈ غیر ملکیوں کو جاری ہونے والے اقامے کی مدت پانچ برس ہوگی ـامارات الیوم کے مطابق ملازمتوں سے سبکدوش ہونے والے غیر ملکیوں کو جاری کیے جانے والے اقامے کے لیے مقرر کی جانے والی چھ شرائط جن میں اہم ترین شرط مالی استطاعت کی ہے جس کے تحت ریٹائرڈ افراد کو کم ازکم 10 لاکھ درھم یا مساوی رقم کے ڈپازٹ کا ثبوت فراہم کرنا ہوگاـ

مالیاتی شرط میں مزید کہا گیا ہے کہ درخواست گزار کو اس بات کا عہد کرنا ہوگا کہ وہ ڈپازٹ کی گئی رقم کوامارات منتقل کرے یا سرمایہ کاری میں استعمال کیا جائے گا- علاوہ ازیں چھ ماہ کی بینک اسٹیٹمنٹ بھی جمع کرانا ہوگی ـدرخواست گزار کو سالانہ آمدنی کا سرٹیفکیٹ بھی دینا ہوگا جو ایک لاکھ 80 ہزار درھم یا اس کے مساوی ہوـ اقامہ حاصل کرنے کے لیے ریٹائرڈ افراد کو پیشہ ورانہ تجربے کا سرٹیفیکٹ بھی پیش کرنا ہوگا جو کم از کم 15 برس کا ہونا چاہئےـ درخواست کے ساتھ اپنی رنگین تصویر اور پاسپورٹ کی فوٹو کاپی جمع کرانا ہوگی-

نیشنلیٹ اتھارٹی کا مزید کہنا تھا کہ اقامہ حاصل کرنے والے ریٹائرڈ افراد اپنے اہل خانہ کے لیے بھی اقامہ جاری کرانے کے اہل ہونگے جس کے لیے ڈیجیٹل طریقے سے درخواست جمع کرائی جا سکے گی-

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔