اتر پردیش: الٰہ آباد  میں گئو کشی کے ملزم جسیم الدین عرف منا  پولیس انکاؤنٹرمیں شدید طور سے زخمی ہو گیا ہے ۔ پولیس کے  مطابق جسیم الدین پر الہ آباد اور فتح پور کے پولیس تھانوں میں گئو کشی سمیت کئی سنگین معاملوں میں مقدمات درج  ہیں ۔ ایس پی گنگا پار دھول جائسوال کے مطابق  جسیم الدین سوراں علاقے میں کوئی سنگین واردات انجام دینے  کے مقصد سے  آیا تھا ۔ مخبروں کے ذریعے اطلاع ملنے پر پولیس فورس نے جسیم الدین کو چاروں طرف سے گھیر لیا ۔

پولیس کی طرف سے گھیرا بندی کئے جانے پر جسیم الدین کی طرف  سے پولیس پر فائرنگ کی گئی ۔ پولیس  نے  بھی جوابی فائرنگ کی ۔ پولیس کی جانب سے جوابی  فائرنگ کئے جانے پر جسیم الدین  شدید طور پر زخمی ہو گیا ۔ جسیم الدین کے پیر وں میں کئی گولیاں لگی ہیں ۔ شدید طور سے زخمی  حالت میں اس کو شہر کے سرکاری  سروپ رانی اسپتال  میں داخل کرایا گیا ہے ۔ جہاں اس کی حالت تشویش ناک بتائی جا رہی ہے  ۔ پولیس  طرف سے جسیم الدین عرف منا کو ایک شاطر مجرم قرار دیا جا رہا ہے   جس پر مختلف پولیس تھانوں میں کئی سنگین دفعات کے تحت مقدمات درج ہیں ۔

پولیس کے مطابق  گئو کشی کے معاملے میں جسیم الدین کی کافی دنوں سے تلاش  کی جا رہی تھی  ۔ جسیم الدین  گئو کشی کی وارادت انجام دینے کے بعد  سے  فرارچل رہا تھا ۔ پولیس نے جسیم الدین کے قبضے سے ایک پستول اور کارتوس بر آمد   ہونے  کا دعویٰ کیا ہے۔