اقلیتی اسکالرشپ اسکیم کی بندش پر دوبارہ غور کیا جائے تھانے کا نگریس اقلیتی شعبہ کی جانب سے کلکٹر کے ذریعہ وزیر اعظم کو براہ راست دی گئی درخواست

20

اقلیتی اسکالرشپ اسکیم کی بندش پر دوبارہ غور کیا جائے
تھانے کانگریس اقلیتی شعبہ کی جانب سے کلکٹر کے ذریعہ وزیر اعظم کو براہ راست دی گئی درخواست
تھانے ( آفتاب شیخ )
اقلیتی امور کی وزارت، حکومت ہند نے اچانک 22/11/25 کو تعلیمی سال 23-2022 کے مکتوب کے ذریعے مطلع کیا ہے کہ اقلیتی طلباء 2009 RTE کے مطابق پہلی سے آٹھویں جماعت تک مفت تعلیم حاصل کر رہے ہیں، لہذا یہ یہ فیصلہ کیا گیا ہے اقلیتی طلباء کو ملنے والی پری میٹرک اسکالرشپ کو بند کردیا جائے اور یہ اسکالرشپ صرف نویں اور دسویں جماعت کے طلباء کو ہی دی جائے۔ تھانے شہر (ضلع) کانگریس کمیٹی اقلیتی شعبہ کا ایک وفد مہارشٹر کے سیکریٹری اور اقلیتی لیڈر انیس قریشی کی قیادت میں اور مہاراشٹر پردیش کانگریس کمیٹی کے سیکریٹری آفتاب شیخ کی موجودگی میں ضلع کلکٹر کے دفتر پہنچا اور وزیر اعظم کے نام کا ایک میمورنڈم ایڈیشنل کلکٹر منیشا دھولے کو پیش کیا اور درخواست کی جس میں پہلی جماعت سے آٹھویں جماعت میں پڑھنے والے طلباء کے لیے مذکورہ اسکیم کو پچھلے سال کی طرح ہی رکھا جانے کا مطالبہ کیا اور اچانک اسکالر شپ بند کیے جانے کے فیصلہ کی مذمت بھی اقلیتی شعبہ کی جانب سے کی گئی۔ اور درخواست کی گئی ہے کہ اقلیتی اسکالرشپ ( پہلی سے آٹھویں) کو بند کرنے اور ہندوستان میں اقلیتی برادری کے لاکھوں طلباء کو اسکالرشپ بحال کرنے کے فیصلے پر نظر ثانی کریں۔ کانگریس رہنما انیس قریشی نہ کہا کی بی جے پی مرکزی حکومت مسلمانوں کے ساتھ ساتھ تمام اقلیتوں کے ساتھ تعصب کررہی ہے اور نشانہ بنا رہی ہے وزیراعظم غریب ضرورت مندوں کی مدد کرنے جگہ اپنے صنعت کار دوستوں کی مدد کر رہے ہے اور وہوہ جمہوریت کا گلا گھونٹ کر حکومت سازی کے لیے اسمبلی اراکین کی خرید و فروخت میں بی جے پی کی مدد کر رہے ہیں۔
مہاراشٹر کانگریس کے سیکریٹری آفتاب شیخ نے کہا کہ اقلیتی طبقہ کو ملنے والی اسکالرشپ کو بند کرکے ایک بار پھر سے حکومت نے اقلیتوں کے ساتھ اپنی کھلی دشمنی کا اظہار کیا ہے۔ سچر کمیشن کی سفارشات پر عمل آوری کی بجائے حکومت اس کے برعکس کو ملنے والی سہولیات کو ختم کررہی ہے آج اقلیتی سماج کو مین اسٹریم میں لانے اور تعلیم حاصل کرنے کے لیے نئی سہولیات فراہم کرنے کی بجائے موجود سہولتیں بھی ختم کررہی ہے ہم اس کی سخت مذمت کرتے ہیں۔ اس موقع پر تھانے شہر کانگریس کمیٹی اقلیتی شعبہ کے صدر حاجی نور خطیب کے ساتھ مہاراشٹر یوتھ ونگ لیگل سیل کے صدر ایڈوکیٹ ضیا شیخ، ایم پی سی سی ممبر شکیلہ شیخ، ایم پی سی سی ممبر اقلیتی بدھ رہنما رمیش اندیسے، جین سماج کے کوکن زون کے وائس چیئرمین دیپک ادھانی، سکھ سماج سے پپو اٹوال، کرشچن سماج سے باپو چوکسے، کلدیپ سنگھ منڈے، بلاک صدر فیروز شیخ، وائس صدر ماجد شیخ، شیرین شیخ، وسیم لگڑ، شکیل شیخ وغیرہ موجود تھے۔