• 425
    Shares

ناندیڑ۔ 5 ستمبر (ورق تازہ نیوز ):ناندیڑشہر کے دیگلورناکہ علاقہ میں واقع ریاست کے پہلے اردو گھر کا افتتاح ۴۱ جولائی کو عمل میں آیا تھا۔ ریاستی احکامات کے مطابق مرحلہ وار اردو گھر کو کارکرد کرنے کی تیاریاں جاری ہے۔ اردو گھر میں موجود ہال کا کرایہ محکمہ تعمیرات کی جانب سے طئے کر کے ضلع کلکٹر آفس کو اس کی اطلاع دی گئی ہے۔

ضلع کلکٹر جو اردو گھر کی نگراں کارثقافتی کمیٹی کے صدر ہے انہوں نے کرایہ کی منظوری کی لیے ریاستی حکومت کے محکمہ اقلیتی ترقیات کے پاس فائیل روانہ کی ہے۔ کرایہ طئے ہونے کے بعد مستقبل میں جلد ہی ہال بھی مختلف پروگرامس کے لئے لوگوں کو دستیاب ہوگا۔ اردو گھر میں موجود لائبریری اور اسٹڈی روم میں ابھی تک شروع نہیں ہوئے تھے اس سلسلہ میں اردو گھر ثقافتی کمیٹی کے ممبران نے پچھلے اجلاس میں لائبریری اور اسٹڈی سینٹر کو فوری شروع کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔

ضلع کلکٹر کی ہدایت پر یکم ستمبر سے اردو گھر میں مقامی اور بیرونی اخبارات مطالعہ کے لئے منگوائے جارہے ہیں۔ اب باقاعدہ طور پر وہاں لوگ آکر اردو کے علاوہ مراٹھی اور انگلش کے زبان کے اخبارات کا بلا معاوضہ مطالعہ روزانہ صبح 8 تا 10 بجے اور شام 5 تا 8 بجے کے درمیان کر سکتے ہیں۔

اردو گھر کے لائبریرین غلام محمد نے بتایا کہ اخبارات کے مطالعہ سینٹر کا اردو گھر میں آغاز ہو چکا ہے اور قارئین آکر اس کا بلا معاوضہ مطالعہ کر سکتے ہیں۔ لائبریری میں کتابیں بھی موجود ہے اور لائبریری بھی آئندہ دو یا تین دن میں عوام کے لئے مکمل کھول دی جائیں گی ۔ لائبریری کے لئے معمولی ماہانہ ممبر شپ فیس رکھی جارہی ہے۔ لائبریری کے لئے ممبر سازی کا کام بھی شروع کیا جارہا ہے۔ یہ لائبریری دن بھر کھلی رہے گی اور جو ممبر شپ حاصل کر چکے وہ افراد اردو گھر کی لائبریری میں آکر کتابوں کا مطالعہ کر سکیں گے۔ اخبارات کے مطالعہ سینٹر کے آغاز کی اطلاع ملنے پر آج اردو گھر ثقافتی کمیٹی کے رکن منتجب الدین نے اردو گھر کا معائنہ کیا اور اخبارات کا مطالعہ کر کے لائبریری کو بھی جلد سے جلد شروع کرنے کی اپیل کی ۔

ورق تازہ نیوز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں  https://t.me/waraquetazaonlineاور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔